تحصیل پنڈ دادنخان میں جاری تر قیاتی کام کھٹائی میں ،سرکاری خزانے کو کروڑوں کی پھکی،

تحصیل پنڈ دادنخان میں جاری تر قیاتی کام کھٹائی میں ،سرکاری خزانے کو کروڑوں کی پھکی،اعلیٰ حکام نے بھی آنکھیں موند لیں
2014 میں سیلاب کے باعث ہونے والی تباہی کے پیش نظر ترقیاتی کام شروع ہوئے،سیلاب ، الیکشن سب گزر گئے کام تا حال جوں کے توں، حکومت پنجاب سے فوری ایکشن کا مطالبہ،
پنڈ دادنخان(مہر نوید حیدر)تحصیل پنڈ دا د نخان میں2014 میں سیلاب کے باعث ہونے والی تباہی کے پیش نظر ترقیاتی کام آج بھی جوں کے توں، سرکاری خزانے کو کروڑوں کی پھکی،سیلاب ، الیکشن ،سب گزر گئے عوام کا تا حال ٹوٹی پھوٹی،گردو غبار،سڑکوں پر گزرا، اعلیٰ حکام خواب غفلت،عوام کا حکومت پنجاب سے فوری فوری ایکشن کا مطالبہ تفصیلات کے مطابق تحصیل پنڈ دادنخان جس کو اب پسماندہ تحصیل کا نام دے دیا جائے تو کوئی فرق نہیں پڑے گاکیونکہ تحصیل پنڈ دادنخان سے سیاستدانوں نے سوتیلی ماں جیسا سلوک کیاتھا اور اب بھی یہ ظلم اپنی پوری آب و تاب سے جاری ہے،ظلم کی داستانیں رقم کرنا یہا ں کے سیاستدانوں کا منشور ہے، 2014 میں آنے والے سیلاب سے ہونے والی تباہی کے نشان ستم آج بھی اس تحصیل میں ملیں گئے، 2014 کے سیلاب نے ،1992 اور 1998 کی طرح عوام کو دن میں تارے دیکھا دیے، سیلاب سے لوگوں کی فصلیں، مال مویشی، اور مکانات کو شدید نقصان پہنچا، جس میں اس وقت کی مسلم لیگ ن کی حکومت بندہ نواز پالیسوں کو اپناتے ہوئے اپنے حامیوں اور درباریوں کے ساتھ خوب تعاون کیا،جبکہ اب 2014 میں بھی ایسے ہی کیا گیا، سیلاب سے متاثرہ پنڈ دانخان میں ترقیاتی کاموں کے انبار لگ گئے،لیکن ان کاموں کا جیسے ہی آغاز ہوا عام انتخابات راستے میں حائل ہوگئے، الیکشن گزرئے مسلم لیگ ن جیت گئی، کچھ عرصہ گزرا تو نوبزاہ راجہ اقبال مہدی اس دار فانی سے رخصت ہوگئے جس کہ بعد ان کی سیٹ پر دوبارہ الیکشن کا اعلان ہوا ، الیکشن ملتوی ہوئے پھر تاریخ کا اعلان ہوا مقر ر تاریخ پر الیکشن ہوا تو جیت نے دوبارہ مسلم لیگ ن اور نوابزاہ خاندان کے قدم چومے اور اب الیکشن کو کافی عرصہ گزر گیا لیکن ترقیاتی کام تا حال اپنے اختتام کو نہیں پہنچے ، ذرائع کے مطابق ان ترقیاتی کاموں میں نا قص مٹیریل سے سرکاری خزانے کو کروڑوں کا ٹیکہ لگایا گیاہے،سٹرکیں اور گلیاں تاحال گردوغبار میں ادھوری پڑی ہیں جس سے کئی بارپرنٹ اور الیکڑانک میڈیا کی جانب سے نشاندہی کی گئی لیکن اعلیٰ حکام لمبی تان کر سوئے ہیں، عوام اور سماجی حلقوں کا حکومت پنجاب سے فوری طور پر ترقیاتی کاموں میں غفلت اور سست روی پر فوری طور پر نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے