ضلع جہلم میں نئے اے ای اوز کو دور دراز کے علاقوں میں بھرتی کرکے وزیر اعلیٰ پنجاب کے وژن کو ناکام بنائے جانے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے

جہلم(عبدالغفوربٹ )ضلع جہلم میں نئے اے ای اوز کو دور دراز کے علاقوں میں بھرتی کرکے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف کے مقاصد اور وژن کو ناکام بنائے جانے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔تفصیلات کے مطابق باوثوق ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ اگلے چند دنوں میں ضلع جہلم میں جونئے اسسٹنٹ ایجوکیشن آفیسرز بھرتی کیے جا رہے ہیں ۔انھیں ان کے گھر سے کافی دور مراکز پر بھرتی کیا جا رہا ہے جبکہ دیگر اضلاع میں اے ای اوز سے مشاورت کے بعد انھیں ان کے گھروں کے نزدیک مراکز پر بھرتی کیا جا رہا ہے۔کیونکہ انھیں جس مقصد کیے لیے بھرتی کیا جا رہا ہے وہ تب ہی پورا ہوگا اگر انھیں ان کے گھروں کے نزدیک مراکز پر تعینات کیا جائے۔ اس کے علاوہ یہ بھی اطلاع ہے کہ پہلے سے کام کرنے والے جن اے ای اوز کے پاس ایڈیشنل چارج تھا وہ تو اپنے گھروں کے قریب ہی کام کرتے رہیں گے لیکن جو اے ای اوز این ٹی ایس ٹیسٹ پاس کرکے اب بھرتی ہو رہے ہیں انھیں گھروں سے دور بھیجا جا رہا ہے۔اس کی وجہ سے نئے بھرتی ہونے والے مرد اے ای اوز بالعموم اور خواتین اے ای اوز بالخصوص پریشانی کا شکا ر ہو گئے ہیں۔