امریکی وفد کی آرمی چیف سے ملاقات میں پاک فوج کی قربانیوں کا اعتراف

راولپنڈی: امریکی سینیٹ کی آرمڈ سروسز کمیٹی کے وفد نے سینیٹر جان مکین کی سربراہی میں آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاک فوج کی قربانیوں کا اعتراف کیا اور اسے سراہا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے ڈائریکٹر جنرل میجر جنرل آصف غفور کی جانب سے جاری بیان کے مطابق سینیٹر جان مکین کی سربراہی میں امریکی آرمڈ سروسز کمیٹی کے وفد نے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی۔ وفد میں لنزے گراہم، شیلڈن وائٹ ہاؤس، الزبتھ وارین، ڈیوڈ پرڈیو اور امریکی ناظم الامور برائے پاکستان مسٹر جوناتھن بھی شامل تھے۔
View image on TwitterView image on TwitterView image on Twitter
Follow
Maj Gen Asif Ghafoor ✔ @OfficialDGISPR
US Delegation acknowledged Pak’s sacrifices & contributions in WoT. Senators agreed on importance of Pak-Afg security coop & coord.(2 of 2).
11:14 PM – 2 Jul 2017
424 424 Retweets 1,242 1,242 likes
Twitter Ads info and privacy

اس موقع پر وفد کو افغانستان سمیت خطے کی مجموعی سیکیورٹی کی صورتحال سے آگاہ کیا گیا جبکہ خطے کے امن و استحکام کے لیے پاکستان کی جانب سے اٹھائے گئے مثبت اقدمات پر بھی بریفنگ دی گئی۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے پاکستان کا دورہ کرنے، موجودہ چیلنجز اور سیاسی و جغرافیائی صورتحال کے حوالے سے باہمی سمجھوتے کی کوششیں کرنے پر امریکی وفد کا شکریہ ادا کیا۔

سربراہ پاک فوج نے وفد سے ملاقات کے دوران کہا کہ مسائل کے باوجود پاکستان نے خطے کے امن و استحکام کے لیے ہر ممکن کردار ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ اس ضمن میں پاکستان اپنی کوششیں جاری رکھے گا البتہ اس مقصد کے حصول کے لیے پاک امریکا سیکیورٹی تعاون انتہائی اہم ہے۔
امریکی وفد کے سربراہ سینیٹر جان مکین نے اس موقع پر دہشت گردی کے خلاف جنگ میں پاک فوج کی کاوشوں اور قربانیوں کا اعتراف کیا اور اسے سراہا۔ امریکی وفد نے پاک افغان سیکیورٹی تعاون اور ہم آہنگی کی اہمیت سے بھی اتفاق کیا۔
یاد رہے کہ سینیٹر جان مکین کی قیادت میں امریکی وفد پاکستان کے دورے پر ہے اور قبل ازیں وفد نے وزیراعظم کے مشیر برائے خارجہ امور سرتاج عزیز سے بھی ملاقات کی تھی۔