مریم نواز کی جے آئی ٹی میں پیشی، سیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات ، 2 ہزار 547 پولیس اہلکاروں سمیت رینجرز اور ایف سی تعینات

اسلام آباد ( آن لائن ) وزیر اعظم نواز شریف کی صاحبزادی مریم نواز کی پاناما کیس کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کے روبرو پیشی کے پیش نظر سیکیورٹی کے انتظامات مکمل کرلیے گئے ہیں۔ جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف 2 ہزار 547 پولیس اہلکار ڈیوٹی سر انجام دیں گے جبکہ رینجرز اور ایف سی کے اضافی دستے بھی تعینات کیے جائیں گے۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق وزیر اعظم کی صاحبزادی مریم نواز کی پیشی کے موقع پر جوڈیشل اکیڈمی میں کسی بھی غیر متعلقہ شخص کو داخل نہیں ہونے دیا جائے گا۔ جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف کے تمام راستے سیل کردیے گئے ہیں اور وہاں عام افراد کا داخلہ بند کردیا گیا ہے۔
مریم نواز کی جوڈیشل اکیڈمی آمد کے موقع پر مسلم لیگ ن کے کارکنوں کی بڑی تعداد کی آمد متوقع ہے جس کے باعث سیکیورٹی کے سخت ترین انتظامات کیے گئے ہیں۔ نجی ٹی وی نیو نیوز کے مطابق جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف لیڈی پولیس اہلکاروں سمیت2 ہزار 547 پولیس اہلکار ڈیوٹی سر انجام دیں گے، اس موقع پر 4 ایس پی ، 11 ڈی ایس پی اور 33 انسپکٹرز بھی تعینات کیے جائیں گے جبکہ رینجرز اور ایف سی کے اضافی دستے بھی ڈیوٹی دیں گے۔
مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے مریم نواز کی پیشی سے پہلے ہی جوڈیشل اکیڈمی کے اطراف بینرز آویزاں کردیے ہیں جن پر مریم نواز کے حق میں نعرے درج ہیں۔
واضح رہے کہ پاناما کیس کی تحقیقات کرنے والی مشترکہ تحقیقاتی ٹیم (جے آئی ٹی ) نے مریم نواز کو آج (بدھ) کو طلب کر رکھا ہے۔ اس سے قبل وزیراعظم نواز شریف، وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف، وزیر اعظم کے صاحبزادے حسین نواز اور حسن نواز ، وزیر خزانہ اسحاق ڈار سمیت دیگر افراد جے آئی ٹی کے روبرو پیش ہو چکے ہیں ۔ جے آئی ٹی 10 جولائی کو پاناما کیس عملدر آمد بینچ کے روبرواپنی رپورٹ جمع کرائے گی جس کے بعد کیس کا فیصلہ سنایا جائے گا۔