اوباشوں کی 14 سالہ لڑکی سے اغواءکے بعد اجتماعی زیادتی

گگو منڈی (ویب ڈیسک)بگڑے رئیس زادے نے چار ساتھیوں سمیت غریب کی 14 سالہ بیٹی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ محنت کش محمد صدیق کی بیٹی تسمیہ برف لینے گھر سے نکلی جسے منان وغیرہ اغواءکر کے لے گئے۔ اوباش منان چار نامعلوم ساتھیوں سمیت رات بھر تسمیہ سے اجتماعی زیادتی کرتا رہا۔ ملزمان زیادتی کی ویڈیو بھی بناتے رہے۔ حالت غیر ہونے پر متاثرہ لڑکی کو اس کے گھر کے باہر پھینک کر فرار ہو گئے۔متعلقہ تھانے کے ایس ایچ او نے بتایاکہ درخواست موصول ہو گئی ہے ملزمان کی گرفتاری کیلئے پولیس پارٹی روانہ کر دی ہے جلد ملزمان کو گرفتار کر لیا جائے گا۔
تفصیلات کے مطابق نواحی بستی محمد پورہ کے رہائشی محنت کش محمد صدیق کی 14 سالہ بیٹی تسمیہ گزشتہ روز قریب تین بجے برف لینے گھر سے نکلی تو گلی میں پہلے سے موجود مغل پورہ چوک کا رہائشی اوباش منان اپنے ساتھی کے ہمراہ اسے موٹرسائیکل پر اغواءکر کے نامعلوم مقام پر لے گیا جہاں منان اور اس کے چار نامعلوم ساتھی رات بھر تسمیہ کو باری باری اپنی حوس کا نشانہ بناتے رہے۔ ملزمان کو اجتماعی زیادتی کی وجہ سے جب 14سالہ تسمیہ کی حالت غیر ہو گئی تو ملزمان اسے بستی محمد پورہ میں اس کے گھر کے باہر پھینک کر فرار ہو گئے۔ ہوش میں آنے کے بعد تسمیہ نے اپنے ساتھ ہونے والی زیادتی کے متعلق اپنے گھر والوں کو بتایا۔ تسمیہ کے مطابق ملزمان موبائل سے زیادتی کی ویڈیو بناتے رہے۔ایس ایچ او تھانہ گگو منڈی مہرریاض سیال کے مطابق متاثرہ لڑکی کے والد نے ابھی درخواست دی ہے جس پر ملزمان کی گرفتاری کیلئے پولیس پارٹی روانہ کر دی گئی ہے۔ اور جلد ملزمان کو گرفتار کر لیا جائے گا۔