شہنشاہ تعمیرات ایم پی اے چوہدری لال حسین آف گھر مالہ وارڈ نمبر 36بھی حلقہ پی پی 26کا حصہ ہے ایک نظر اس پر بھی

جہلم (مہربان چوہدری) شہنشاہ تعمیرات ایم پی اے چوہدری لال حسین آف گھر مالہ وارڈ نمبر 36بھی حلقہ پی پی 26کا حصہ ہے ایک نظر اس پر بھی جہلم کی سیاست تیرے صدقے جاواں جہلم کی سیاست نے لوٹ مار جعلی چیک ناجائز فروشی فحاشی اور جھوٹے مقد مات کے علاوہ جہلم کی عوام کو کچھ نہیں دیا ہے ترقیاتی کاموں میں صرف اور صرف حلقہ پی پی 26 میں بہت کام ہوا ہے اور اسی لئے ایم پی اے چوہدری لال حسین آف گھر مالہ کو شہنشاہ تعمیرات کہا گیا ہے ان خیالات کا اظہار اہل محلہ مرزا آباد کی ایک میٹنگ میں سید اکرم حسین شاہ بخاری محلہ مرزا آباد نے کرتے ہو ئے کہا کہ عوام کی بہت بڑی غلطی یہ بھی ہے کہ ضمنی الیکشن میں نوابزادہ مطلوب مہدی کو ووٹ دے کر کامیاب کیا ہے میری نظر میں نہ تو وہ سیاستدان ہیں اور نہ ہی وہ سیاستدان بن سکتے ہیں وہ ایک شکاری ہیں شکار ان کا شوق ہے شیر کے نشان کو ووٹ ملا اور وہ جیت گئے انہوں نے کہا کہ وارڈ نمبر 36ایک وارڈ ہے جس کو مسلم لیگ (ن) کا گڑھ کہا جاتا ہے ہر بار مسلم لیگ (ن) کا امیدوار کامیاب ہوتا ہے مگر اس وارڈ کی بد قسمتی ہے کہ ہر بار لالی پاپ دے کر سیسی ووٹ لیتے ہیں اور اس وارڈ کے لوگ اعتماد کرتے ہیں حسن آباد ،رشیدہ آباد،مرزا آباد ،ڈھوک مہر عدالت،جمیل ٹاؤن اور مغل سٹریٹ بارشوں میں دریا جیسامنظر پیش کر رہے ہوتے ہیں مگر اس وارڈ کے ساتھ سوتیلی ماں جیسا سلوک کیوں کیا جا رہا ہے کبھی اس وارڈ کے مکینوں سے گیس کے وعدے کئے جاتے ہیں کبھی آب نکاسی کے وعدے کئے جاتے ہیں مگر کوئی بھی وعدہ کسی سیاسی کا وفا نہیں ہوا ہے ایم این اے مطلوب مہدی خان ضمنی الیکشن میں ووٹ کے لئے اس وارڈ نہیں آئے مگر عوام نے یتیم سمجھ کے مسلم لیگ (ن) کاامیدوار سمجھ کر ووٹ دیئے مگر جیت کے بعد وارڈ نمبر 36میں آ کر کسی کا شکریہ بھی ادا نہیں کیا ہے اب وقت آ گیا ہے کہ الیکشن سے پہلے وارڈ نمبر 36سے کئے وعدے پورے نہ کئے گئے تو اس وارڈ میں ووٹ مانگنے والے کے ساتھ جو سلوک کیا جائے گا وہ سارا زمانہ دیکھے گااس وارڈ سے گیس کا وعدہ کیا گیا تھا آب نکاسی کا وعدہ کیا گیا تھا اور جن محلوں میں ترقیاتی کاموں کی ضرورت ہے انہیں مکمل کیا جائے گا اگر یہ سب کام مکمل ہوئے تو ووٹ ملیں گے ورنہ سیاستدان شرمندہ ہو کر جائیں گے ہم ایم پی اے چوہدری لال حسین آف گھر مالہ سے بھی مطالبہ کرتے ہیں کہ وارڈ نمبر 36کو بھی تھوڑا ٹائم دیں کیوں کے اب اس وارڈ کے مکینوں کی نظریؓ آپ پر ہیں اور آپ سے ہی امیدیں ہیں انہوں نے کہا کہ ہم کام لینا بھی جانتے ہیں ہمیں بولنا بھی آتا ہے سمجھنا اور سمجھانا بھی آتا ہے اب اہل وارڈ نمبر 36 کا ایک مطالبہ ہے کہ ہمارے مطالبے پورے کرو اور ووٹ لو اب ہم اپنا حق مانگ کر نہیں چھین کر لیں گے انہوں نے کہا کہ میرا کسی سیاسی جماعت سے تعلق نہیں ہے اور حق کی بات یہ ہے کہ ضلع جہلم میں صرف ایک مسلم لیگ (ن) کا ایم پی اے ہے جس نے وارڈ نمبر 36کے علاوہ اپنے پورے حلقہ میں ترقیاتی کام کروائے ہیں مگر ہماری وارڈ کے کام کیوں نہیں ہوئے کیا ہماری وارڈ کے لوگوں کا یہ قصور ہے کہ انہوں نے مسلم لیگ (ن) کو ووٹ دیئے ہیں اب ہم پوری وارڈ متحد ہیں