بھارت خام خیالی میں نہ رہے سرحدوں کی حفاظت کرنا جانتے ہیں، چین

بیجنگ: چین نے ایک بار پھر بھارت کو خبردار کیا ہے کہ وہ کسی خام خیالی میں نہ رہے ہم اپنی خودمختاری اور سالمیت کی حفاظت کرنا جانتے ہیں۔
غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق چینی وزارت دفاع کے ترجمان کرنل ووچیان نے بھارت کو خبردار کیا ہے کہ ملکی سالمیت اور خودمختاری کی حفاظت کے حوالے سے چین کے عزم پر شک کر کے اپنے لیے خطرہ نہ پیدا کرے۔ انہوں نے ایک بار پھر بھارت سے مطالبہ کیا کہ وہ ڈوکلام سے اپنے فوجیوں کو پیچھے ہٹائے۔
کرنل ووچیان نے کہا کہ ملکی سلامتی کی حفاظت میں چین کا عزم غیر متزلزل ہے لہٰذا ہماری خواہش ہے کہ بھارت اپنے لیے خطرات پیدا نہ کرے اور کسی خام خیالی میں نہ رہے، چینی فوج کے قیام کو 90 برس مکمل ہو رہے ہیں اور وقت کے ساتھ ساتھ ملکی سلامتی کا دفاع کرنے کے حوالے فوج کی صلاحیتوں میں اضافہ ہوا ہے، ایک پہاڑ کو ہلانا آسان ہے لیکن پیپلز لبریشن آرمی کو ٹس سے مس نہیں کیا جا سکتا۔
خیال رہے کہ ڈوکلام کے مقام پر بھارت، بھوٹان اور چین کی سرحدیں ملتی ہیں اور اس علاقے پر تینوں ممالک اپنا حق جتاتے ہیں، بھارت نے گزشتہ ماہ یہ الزام عائد کیا تھا کہ چین اس علاقے میں بھارتی سرحد تک سڑک تعمیر کر رہا ہے جس کے بعد بھارتی فوجیوں نے چین کے علاقے ڈونگ لانگ تک پیش قدمی کر لی تھی اور تعمیراتی کام روکنے کی کوشش کی تھی۔ اس واقعے کے بعد سے بھارتی فوجی پیچھے نہیں ہٹے جبکہ چین کا مطالبہ ہے کہ بھارت غیر مشروط طور پر اپنے فوجیوں کو واپس بلائے تب ہی اس کے ساتھ کسی قسم کے مذاکرات ہو سکتے ہیں۔