حلقہ این اے 63کے فنڈز بحال،جس پر تمام حلقہ میں خوشی کی لہر دوڑ گئی۔

جہلم(محمد عثمان)پاکستان مسلم لیگ ن کے مرکزی راہنما رکن قومی اسمبلی نوابزادہ راجہ مطلوب مہدی خان کے تمام ترقیاتی فنڈز بحال کر دیئے گئے ہیں،جس سے ان کے حلقہ کے لوگ بہت خوش ہو رہے ہیں یاد رہے کہ ان کے فنڈز جو کہ سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف اور خادم اعلیٰ پنجاب میاں محمد شہباز شریف نے ان کے بابا مرحوم رکن قومی اسمبلی نوابزادہ راجہ اقبال مہدی خان سے ذاتی لگاؤ ہونے کی خاطر دیئے تھے جب بلدیاتی انتخابات کے بعد چیئرمین ضلع کونسل کا انتخاب ہونا تھا تو رکن قومی اسمبلی نوابزادہ مطلوب مہدی خان نے اپنے بابا کا قول نبھاتے ہوئے چیئرمین و وائس چیئرمین ضلع کونسل کیلئے راجہ قاسم علی خان جالپ اور ڈاکٹر بشیر احمد کو نامزد کیا جبکہ حکومت کی طرف سے حافظ اعجاز احمد جنجوعہ کو چیئرمین کیلئے نامزد کیا گیا لیکن منتخب چیئرمین ضلع کونسلرز نے جمہوری طریقہ سے مسلم لیگ ن میں رہتے ہوئے اور مرحوم رکن قومی اسمبلی نوابزادہ اقبال مہدی خان کا قول نبھاتے ہوئے رکن قومی اسمبلی نوابزادہ راجہ مطلوب مہدی خان کا ساتھ دیتے ہوئے راجہ قاسم علی خان جالپ اور ڈاکٹر بشیر احمد کو چیئرمین اور وائس چیئرمین بھاری اکثریت سے منتخب کیا جس پر نامعلوم وجوہات پر وفاقی حکومت سے ان کے منظور شدہ فنڈز جاری نہ ہو سکے لیکن موجودہ حالات میں وفاقی حکومت نے آئندہ آنے والے انتخابات کے پیش نظر ان کے فنڈز بحال کر دیے ہیں جس سے ان کے حلقہ میں ایک ترقیاتی انقلاب آئیگا جبکہ یہ وفاقی حکومت کا ایک بہترین فیصلہ ہے جس پر لوگ ان کو دعائیں دے رہے ہیں۔