ایڈیشنل سیشن جج نے وکیل کی زمین پر قبضہ کے کیس میں ایس ایچ او تھانہ گوجرہ سمیت 18ملزمان کے وارنٹ گرفتاری جاری کر دئیے

ملک وال(نامہ نگار) ایڈیشنل سیشن جج نے وکیل کی زمین پر قبضہ کے کیس میں ایس ایچ او تھانہ گوجرہ سمیت 18ملزمان کے وارنٹ گرفتاری جاری کر دئیے سابق صدر بار ایسوسی ایشن شعیب احمد گھیگا نے میڈیا کو بتایا کہ ایس ایچ او تھانہ گوجرہ ریاض پڑھیار نے مسلح ملزمان کے ہمراہ میری ملکیتی زمین واقع موضع بکن میں گیارہ فروری کو صبح چھ بجے قبضہ کروانا شروع کر دیا اور عارضی تعمیر لیے بغیر تعمیراتی میٹریل کے دیوار بنواکر قبضہ کروا دیا جو بعد ازاں وکلاء کے احتجاج کے بعد ڈی پی او نے نوٹس لیا اور ڈی ایس پی لیگل نے موقع پر جا کر کام بند کروایا جس کے خلاف ایڈیشنل سیشن جج کی عدالت میں رٹ دائر کر رکھی تھی جس پر ایڈیشنل سیشن جج اعجاز احمد بٹر نے مقدمہ کی سماعت کرتے ہوئے ایس ایچ او تھانہ گوجرہ سمیت بارہ نامز ملزمان اور چھ نامعلوم ملزمان کے وارنٹ گرفتاری جاری کر دئیے ہیں شعیب احمد گھیگا نے کہا کہ ایس ایچ او تھانہ گوجرہ ریاض پڑھیار نے میری زمین پر قبضہ سے دو روز قبل گوجرہ کے رہائشی عاطف گوندل کے گھر کی چار دیواری گراکر ٹریکٹر کے ساتھ راستہ بنا ڈالا تھا جبکہ موصوف کے پاس تحصیلدار یا محکمہ ریوینیو کے کوئی احکامات بھی نہ تھے شعیب احمد گھیگا نے کہا کہ ایس ایچ او کے خلاف اعلیٰ افسران کی خاموشی بھی باعث تشویش ہے ۔۔۔