ڈی ایچ کیو ہسپتال جہلم کا آوے کا آوا بگڑ اہوا ہے ایم ایس ڈی ایچ کیو سے لے کر کلاس فور کے ملازم تک،شانی بٹ

جہلم(عبدالغفور بٹ)حواء کی حاملہ بیٹی مجبوری کے تحت ڈی ایچ کیو ہسپتال جہلم کے دروازوں پر دستک دیتی رہی مگر نرسوں نے دروازے نہ کھولے،مگر ایمرجنسی کی سیڑھیوں پر ہی بچہ کی پیدائش کے فوراً بعد نرسوں نے اس سے مزید پڑھیں